تبدیلی مگر کیسے؟



  • آج کل ہر کوئی تبدیلی اور انقلاب کی باتیں کر رہا ہے اور عوام کو اپنا ہمنوا بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔ کوئی کہتا ہے کہ سونامی آرہا ہے، کوئی کہتا ہے کہ جمہوریت اور ووٹ سے ہی تبدیلی آئے گی اور اگلے الیکشن میں تبدیلی آنے والی ہے، کوئی کہتا ہے کہ فوج کو مارشل لاء لگا دینا چاہیئے،کوئی کہتا ہے کہ صدارتی نظام ہونا چاہیئے، کوئی کہتا ہے کہ خونی انقلاب سے ہی حالات بدلیں گے، کوئی اسلامی انقلاب کی بات کرتا ہے، کوئی کہتا ہے کہ خلافت والا نظام ہونا چاہیئے جب تک خلافت قائم نہیں ہوگی حالات نہیں بدلیں گے۔

    آخر کوئی یہ کیوں نہیں بتاتا کہ وہ رشوت کیسے ختم کرے گا؟

    آخر کوئی یہ کیوں نہیں بتاتا کہ وہ کرپشن کیسے ختم کرے گا؟

    معیشت کیسے بحال کرے گا؟ مہنگائی کیسے ختم کرے گا؟

    بیروزگاری کیسے ختم کرےگا؟

    لوڈشیڈنگ کیسے ختم کرے گا؟

    صنعتیں کیسے لگائے گا؟

    ٹیکس کس طرح کلکٹ کرے گا؟

    امن امان کیسے قائم کرے گا؟

    تعلیم اور صحت کے لئے کیا کرے گا اور کیسے کرے گا؟

    دہشتگردی، خودکش حملے، ڈرون حملے اور ٹارگٹ کلنگ کیسے ختم کرے گا؟

    عوام کو تبدیلی لانے کے لئے کیا کرنا چاہیئے اور کون سا راستہ اختیار کرنا چاہیئے؟



  • صبح ضرور آئیگی صبح کا انتظار کر



  • @Anwer Kamal

    صبح ضرور آئیگی صبح کا انتظار کر

    گذشتہ 64 سالوں سے عوام خیر سے یہی کام کر رہے ہیں۔



  • صرف سحر کی اس میں جب تم آخر شب تک جاگے ہو

    سو مت جانا جاگنے والوں اس کے بعد اجالے ہیں



  • Dekho bhai vote se aap ke masley hal hotey nazar nhi atey....

    ager esa hota to pher woh log elect na hotey jen ka mazi Dagh dar hey...

    but lets do one more try... vote for some with vision and corruption free past.