تحریک انصاف کے رہنماؤں کے خلاف مقدمہ خارج



  • http://www.topstoryonline.com/punjab-govt-withdraws-case-against-pti-leaders

    لاہور( نعیم ملک) تحریک انصاف پاکستان کے صدر جاوید ہاشمی سمیت کئی اہم رہنماؤں کے خلاف لاہور پولیس نے دفعہ 144 کی خلاف ورزی کرنے پردرج ہونے والا مقدمہ وزیر اعلیٰ شہباز شریف کی مداخلت پر خارج کر دیا ہے۔

    تحریک انصاف نے صوبائی دارالحکومت کے قرطبہ چوک مزنگ چونگی سے مخدوم جاوید ہاشمی کی قیادت میں بجلی کی لوڈشیڈنگ اور بڑھتی ہوئی مہنگائی کے خلاف ایک احتجاجی جلوس نکالا، جس میں مخدوم جاوید ہاشمی کے علاوہ پاکستان تحریک انصاف کے دیگر رہنماوٗں خورشید محمود قصوری،احسن رشید،میاں محمودالرشید،یاسمین راشد، ابرارالحق،نورریز شکور،شبیر سیال،راوٗقیصر علی خان،عندلیب عباس،زنیب عباس، اعجاز چوہدری،فرخ حبیب،مراد راس کے علاوہ پاکستان تحریک انصاف کی ویمن ونگ کی خو اتین،لیبر ونگ،اور سٹوڈنٹس ونگ کے نوجوان شامل شریک تھے۔

    ریلی کے شرکا ء نے ہاتھوں میں پلے کارڈ اور بینرز اٹھا رکھے تھے جس پر لوڈشیڈنگ کے حوالے سے صوبائی اور وفاقی حکومتوں کے خلاف نعرے درج تھے۔مظاہرین مزنگ چونگی سے واپڈا ہاؤس چئیر نگ کراس پہنچنے تک وفاقی اور صوبائی حکومتوں کے خلاف بھرپور نعرے بازی کرتے رہے ۔

    جلوس کے اختتام پر مخدوم جاوید ہاشمی نے کہا کہ میاں نواز شریف ا ور میاں شہباز شریف کی وفاقی حکومت کے خلاف نعرے بازیاں اور بیان بازیاں دراصل نورا کشتی ہے اس کا حاصل وصول کچھ نہیں ۔تمام تر مسائل کا حل صر ف اور صرف پاکستان تحریک انصاف کے پاس ہے اور انقلاب کا سونامی پاکستان تحریک انصاف ہی لے کر آئے گی۔

    جبکہ دوسری جانب مال روڈ لاہور پر کسی بھی قسم کی ریلی جلوس یا جلسوں پر عرصہ ہائے دراز سے حکومت پنجاب کی جانب سے دفعہ 144نافذ کرکے پابندی لگائی جا چکی ہے۔پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے دفعہ 144کی خلاف ورزی کرنے پر SHOسول لائینز انسپکٹر عابد رشید کی مدعیت میں FIR215/12کے تحت مخدوم جاوید ہاشمی ،خورشید محمود قصوری اور ابرابرالحق سمیت 800افراد کے خلاف پر چہ درج کر لیا گیا۔

    بعد ازاں پنجاب حکومت کے ترجمان اور صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ نے اعلان کیا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کے حکم پر تحریک انصاف کے رہنماؤں ارو کارکنوں کے خلاف مقدمہ واپس لیا جا رہا ہے۔جبکہ اس دوران تحریک انصاف کے ظہیر عباس کی جانب سے الٹا رانا ثناء اللہ اور دو سوسے زائد مسلم لیگی کارکنوں پر دفعہ 144کی خلاف ورزی کرنے پر مقدمہ درج کرنے کی درخواست بھی تھانہ سول لائنز میں جمع کروا دی گئی ہے، جس پر پولیس نے ابھی کوئی کارروائی نہیں کی۔



  • قانون اپنا ہے

    جس کے خلاف چاہیں مقدمہ درج کر لیں اور جس کے خلاف چاہیں خارج کر دیں


Log in to reply
 

Looks like your connection to Discuss was lost, please wait while we try to reconnect.