دہشتگردوں اور اسٹیبلشمنٹ کی ساری جماعتیں ایک ساتھ



  • **

    اسامہ بن لادن سے اور جرنیلوں کے بوٹ پالش کر کے سیاست کرنے والے نواز شریف جو سودی اور امریکی اسٹیبلشمنٹ کو خوش کرنے کے لئے بھی سب کچھ کر سکتے ہیں کا شیعہ بہن بھائیوں کے قاتلوں لشکر جھنگوی وغیرہ سے اتحاد کے بعد ایسٹیبلشمنٹ کے سادہ بہار غلاموں مولانا ڈیزل اور فنکشنل لیگ سے بھی اتحاد .**

    **لشکرِجھنگوی کے بعد ن لیگ کا مولانا ڈیزل سے اتحاد

    ابھی یہاں منافقین مسلم لیگ آییں گے اور دوسروں کو گالیاں دے کر نواز شریف کو دودھ کا دھلا خلیفہ ثابت کرنے کو کوشش کریں گے

    **

    آئی کے بعد نواز لیگ کا فنکشنل لیگ سے بھی اتحاد

    آخری وقت اشاعت: منگل 26 فروری 2013 ,‭ 15:15 GMT 20:15 PST

    Facebook

    Twitter

    دوست کو بھیجیں

    پرنٹ کریں

    پاکستان مسلم لیگ نواز، نیشنل پیپلز پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ فنکشنل نے ملک میں ہونے والے آئندہ انتخابات میں ایک دوسرے کے خلاف امید وار نہ کھڑے کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

    اس بات کا فیصلہ منگل کو کراچی میں نواز شریف اور پیر پگاڑا کے درمیان ہونے والی ملاقات کے بعد کیا گیا۔

    اسی بارے میں

    مسلم لیگ نون، جے یو آئی میں انتخابی تعاون

    نواز لیگ اور سندھ یونائیٹڈ پارٹی میں اتحاد

    نواز شریف اور عمران خان، پی پی کے ہوم گراؤنڈ میں

    متعلقہ عنوانات

    پاکستان, سیاست

    ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے سربراہ پیر پگارا، نیشنل پیپلز پارٹی کے سربراہ غلام مرتضی جتوئی اور پاکستان مسلم لیگ نواز کے سربراہ نواز شریف کا کہنا تھا کہ وہ حزب اختلاف کی دیگر سیاسی جماعتوں کو، جن میں جماعتِ اسلامی بھی شامل ہے، بھی اس انتخابی اتحاد میں شامل کرنے کی بھرپور کوشش کریں گے۔

    "سندھ کے عوام کو تاریخ کے بد عنوان اور نا اہل ترین حکومتی اتحاد سے نجات دلانے کے لیے ہر سیٹ پر متتفہ امید اور لانے کی کوشش کی جائے تاہم سندھ کے طول و عرض میں حکمران اتحاد اور اپوزیشن اتحاد میں ون ٹو ون مقابلہ ہو سکے۔"

    نواز شریف

    اس موقع پر نواز شریف نے کہا ہم نے نیشنل پیپلز پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے ساتھ انتخابی اتحاد کا فیصلہ کیا ہے اور تینوں جماعتیں مل کر آئندہ انتخابات میں حصہ لیں گی۔

    مسلم لیگ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ گٹھ جوڑ اور ملی بھگت سے سندھ کے عوام کو دھوکا دیا جا رہا ہے، رشتہ وہی قائم رہتا ہے جس میں لالچ نہ ہو۔

    انہوں نے کہا کہ سندھ کے عوام کو ’تاریخ کے بدعنوان اور نااہل ترین‘ حکومتی اتحاد سے نجات دلانے کے لیے ہر سیٹ پر متفقہ امیدوار لانے کی کوشش کی جائے تا کہ سندھ کے طول و عرض میں حکمران اتحاد اور اپوزیشن اتحاد میں ون ٹو ون مقابلہ ہو سکے۔

    نواز شریف کے مطابق اجلاس میں اس بات پر تشویش کا اظہار کیا گیا کہ چار سال اور گیارہ ماہ حکومت کا حصہ رہنے کے بعد حکمران اتحاد کا ایک حصہ حکومت سے علیحدہ ہو کر اپوزیشن کے مینڈیٹ اور نگران حکومت کے حوالے سے آئینی کردار پر ڈاکہ ڈالنا چاہتا ہے۔

    منظم سازش اور گٹھ جوڑ

    اجلاس میں اس بات پر تشویش کا اظہار کیا گیا کہ چار سال اور گیارہ ماہ حکومت کا حصہ رہنے کے بعد ایک منظم سازش، گٹھ جوڑ کے تحت حکمران اتحاد کا ایک حصہ حکومت سے علیحدہ ہو کر اپوزیشن کے مینڈیٹ اور نگران حکومت کے حوالے سے آئینی کردار پر ڈاکہ ڈالنا چاہتا ہے تاکہ دونوں جماعتیں ملی بگھت سے نگران حکومت قائم کر دیں جو ان کے لیے گزشتہ پانچ سال کی ناقص کارکردگی پر پردہ ڈالے اور انتخابات چوری کرنے کا راستہ فراہم کرے اور اس سازش کو ناکام بنانے کے لیے فیصلہ کیا گیا ہے کہ باقی تمام جماعتوں سے ملکر الیکشن کمیشن اور اعلی عدلیہ سے رجوع کیا جائے۔

    اس موقع پر پیر پگاڑا نے کہا کہ میں جو کچھ کر رہا ہوں اپنے والد کی خواہش پر کر رہا ہوں۔

    انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے پانچ سال میں عوام کو رسوا کیا ہے، خیبر پختونخوا اور بلوچستان میں پیپلز پارٹی کا صفایا ہوگیا ہے۔

    اس سے پہلے قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری نثار علی خان اور پنجاب کے وزیر اعلی میاں شہباز شریف نے کنگری ہاؤس کراچی میں پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے وفد سے ملاقات کی۔

    اس ملاقات میں دونوں جماعتوں کے وفد نے ایک دوسرے کے ساتھ مکمل تعاون کرنے کا بھی اعلان کیا۔

    "پیپلز پارٹی نے پانچ سال میں عوام کو رسوا کیا ہے، خیبر پختنوا اور بلوچستان میں پیپلز پارٹی کا صفایا ہو گیا ہے اگر ہمیں لالچ ہوتا تو ہم پیپلز پارٹی سے اتحاد ختم نہ کرتے، حکومت انتخابات میں دھاندلی کی منصوبہ بندی کر رہی ہے، ہماری کوشش ہے کہ ون ٹو ون انتخاب ہو۔"

    پیر پگارا

    دریں اثناء پاکستان مسلم لیگ نواز کے سربراہ نواز شریف حال ہی میں جماعت اسلامی کے انتقال کرنے والے رہنما پروفیسر غفور احمد کے گھر گئے اور ان کی وفات پر تعزیت کی۔

    اس موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کراچی کو یرغمال بنا لیا گیا ہے۔

    نواز شریف نے چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ریٹائرڈ) فخر الدین جی ابراہیم سے استدعا کی کہ وہ کراچی کی صورت حال پر نظر رکھیں۔

    انہوں نے کہا اگر ملک میں شفاف انتخابات کا انعقاد نہ ہوا تو اس صورت میں انتخابی نتائج تسلیم نہیں کیے جائیں گے۔

    خیال رہے کہ پچیس فروری کو مسلم لیگ نون کے سربراہ نواز شریف اور جمعیت علمائے اسلام فضل الرحمان نے بھی ایک دوسرے سے انتخابی تعاون کا معاہدہ کیا تھا۔

    اس بات کا اعلان پیر کو مسلم لیگ نون کے سربراہ میاں نواز شریف اور مولانا فضل الرحمان نے لاہور کے رائے ونڈ فارم ہاؤس میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا تھا۔

    دونوں رہنماؤں نے پریس کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ انتخابی تعاون کے لیے دونوں جماعتیں اپنی اپنی کمیٹیاں تشکیل دی جائیں گی اور ایک دوسرے سے مذاکرات کے بعد ممکنہ انتخابی تعاون کا طریقۂ کار طے کیا جائے گا۔

    Source: BBC Urdu



  • In order to get into power, Nawaz Sharif will shake hands with anybody even with Gen Musharraf and banned terrorist group Lashkar Jhangvi and Taliban terrorists are already his friends since his actor brother requested Talibans not to attack his Province.

    Taliban terrorists-PML-N-Banned terrorist group Lashkar Jhangvi are now in an alliance.

    Pakistan ka ab Allaha hi hafiz hey



  • Is this going to be another episode of IJI?

    If yes who is funding this time?

    Intersting part is that how taliban knew? that all three guaranters (PMLn, JI and JUIf) will be together in upcoming days. Or was this, demand of guaranters, a signals to all three of them to form alliance.



  • Some facts:

    • Pakistan Peoples Party was in coalition with SSP in 1996 in Punjab and SSP was even in cabinet with ministries.

    • The most effective operation against sectarianism and SSP/LEJ was done by PMLN in their 1997 government, when their leaders either got arrested, killed in police actions or fled to Afghanistan like Riaz Basra.

    • Leader of SSP Azam Tariq was captured and jailed by PMLN.

    • PMLQ and MQM formed their coalition government with SSP in 2002 under General Musharraf, when they were short of one vote. Musharraf released SSP Leader Azam Tariq from jail and formally made coalition after Azam Tariq voted for Jamali along with PMLQ and MQM.

    • PPP’s Chief Minister Sindh Qaim Ali Shah Meets SSP Leader (April 2010)

    The leader of the defunct Sipha-i-Sahaba Pakistan (SSP) who now heads the Ahl-i-Sunnat Waljamaat (ASW), Maulana Mohammad Ahmed Ludhianvi, has held a meeting with Sindh Chief Minister Syed Qaim Ali Shah.

    Source: Dawn News

    MQM Governor Ishrat-ul-Ibad Meets SSP Leader (April 2010)

    This is not the first time that Maulana Ludhianvi has met a prominent government official. About a month ago, he had held a secret meeting with Muttahida Qaumi Movement`s Governor of Sindh Dr Ishratul Ibad.

    Source: Dawn News



  • **

    کوئی مایوسی سی مایوسی ہے

    **

    .

    .



  • Mr. Rasheed is doing his usual blah. Nobody buys your bloney. I mean c'mon PPP and SSP alliance. This news must have been published in Nawa-e-waqt Lahore.


    RQ shahib,

    Do not used bad word. -Admin



  • @rasheed

    Please change ur calendars coz we r in 2013 today.



  • @osakaboy,

    Something more recent for you:

    ASW formally SSP in Imran Khan's Jalsa

    ASW formally SSP in Imran Khan's Jalsa

    Azam Awati of PTI with ASWJ Leader

    Azam Awati of PTI with ASWJ Leader



  • @rasheed

    What are you saying???? SSP and MQM are sister companies i mean politcal parties, both have same agenda killing Pakistanis, but one kills in the name of ethnicity and other kills in the name off religion...

    SSP had issues with PML-N since 90s, when they were outset by the then CM of Punjab, anyone can pick up the news paper of those days which clearly says, these leaders of the terrorist outfit was on Run... and then came the great Mushy, who not only revived MQM but also give another life to SSP...

    This Killer of innocent Pakistanies while they were praying, Malik Ishaq, was arrested in 90s and for mushy in his 10 years didn't prosecuted him and case against him got weakened because the witnesses were made to believe by the govt that this Malik Ishaq kind of guys are nothing but govt own people... so they refused and Malik Ishaq is again freed to kill people of Pakistan..

    To me, the current task of SSP is same of MQM, create anarchy, MQM is doing it by getting 12 people a day killed in Karachi, and SSP is getting global attention by killing hazaaraas

    has anyone noticed, since SSP has taken up terrorist activists in Balochistan, BLA have become non-existent???



  • It is pity that PMLN has pre election alliance with SSP.

    but It would be more interesting to see PMLN approach for post-election alliance to form federal govt.



  • دہشت گردی کے خلاف جنگ والے اشو پر امریکی صدر تو جیت سکتا ہے مگر پاکستانی کا جیتنا مشکل ہے

    البتہ اسٹیبلشمنٹ یا اینٹی اسٹیبلشمنٹ ہونا ابھی بھی سیاست میں اہم فیکٹر ہے

    مگر نگران حکومت کے بعد جب الیکشن کیمپین شروع ہوگی تو لگتا ہے زیادہ زور پرفارمینس پر ہی نظر آیے گا، کرپشن و مہنگائی کے چارٹس، وائٹ و بلیک پیپرز وغیرہ دھڑا دھڑ مارکیٹ میں آئینگے

    مدت پوری نہ کر سکنے کا بہانہ بھی نہیں ہوگا، پانچ سال یعنی کہ پورے پانچ سال ملے مگر عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنا تو کیا، کرنے کا ارادہ بھی نظر نہ آیا