مقدس روحانیت مذہب اور چیف جسٹس فیر صاحب کے فکری غوطے



  • مقدس روحانیت اور مذہب ایک طرح سے ابستراکٹھ کانسپٹ ہیں لیکن بحث کے لئے ان کی محدود قسم کی تعریف کرنے کی ضرورت ہے

    تاکہ آئیڈیا سمجھایا جا سکے

    روحانیت ایک طرح سے مقدس کی تلاش ہے یا اس کوشش کے دوران سوچ اور عقل کی مختلف منزلیں تہ کرنا اور اس پروسیس کے دوران ذاتی تبدیلی کے عمل سے گزرنا اور سبجیکٹو ایکسپیرینس سے گزرنا اور سیککولوجیکل چینج سے گزرنا . مقدس کچھ بھی ہو سکتا ہے جیسے کہ بدھ ازم میں خدا کا کوئی تصور نہیں لیکن پھر بھی وہ ایک مذہب ہے اور اس میں "شعور " حاصل کرنا ایک مقصد ہے . مذہب ایک طرح سے لوگوں کا اکثریتی فیصلہ ہے کہ مقدس تک پونھچنے کا کیا راستہ ہے اور کون سے روحانی عمل انسان کو منزل تک پوھنچاتا ہے . مذہب وال مارٹ اپپروچ کے ذریع روحانی پروسسس کی ہول سیل مارکیٹنگ کرتا ہے اور جب اس میں سے روحانیت غائب ہو جائے تو ایک چیپ چینی پروڈکٹ کی مانند بکتا ہے جو وقتی ضرورتیں تو پوری کرتا ہے لیکن لاسٹنگ ذہنی ، جسمانی اور انسانی فلاح و بہبود کے دور اثر فائدے گول کر دیتا ہے .

    چیف جسٹس فیر صاحب چائنیز مذہب کے چیپ پراڈکٹ پر لعنت بھیج کر ابھی ایک ذہنی لمبو میں ہیں جہاں ان کے ساتھ اس ریل کے ڈبے میں انجمن ستائش باہمی کے اوسط عقل اور فہم کے مضمون نففیس ، ذہنی خلفشار کے شکار ذہنی اور فکری چڑلیں ، صدمے اور شاک سے برپور جاہل جذباتی فکری بیوائیں ( روحی بانو ) اور ایسے کمی اشتراکی جو اپنے کمی پن کے جینیٹک صدمے کی وجہ سے کھل کر اپنے خیالات کے اظہار سے شرماتے ہیں

    چیف جسٹس فیر صاحب سے مودبانہ گزارش ہے کہ مسخروں کے اس ہجوم میں سے اپنے آپ کو غور و فکر کر کے باہر نکالیں اور ذہنی بیماروں اور نفسیاتی مریضوں کے اس ہجوم میں جو اپنے ڈپریشن کا علاج کرنے کے لئے شراب پینے کے شوق میں لبرل بنے ہوے ہیں پر لعنت بھیج کر انھیں اپنی چولیں مرنے کے لئے آزاد چھوڑ دیں .

    ذہنی بیمار اور نفسیاتی مریض چاہے "مذہبی " یا "لبرل" لبادہ اوڑھ لے وہ ہر جگہ فرج کو الماری کہہ کر خریدنے کی کوشش کرتا ہوا پکڑا جاتا ہے

    چیف جسٹس فیر صاحب سے گزارش ہے کہ مذہبی اونٹ سے لبرل اونٹ بننے کی جگہ پہلے اپنے آپ کو سمجھیں اور غصہ میں آ کر پہلے سوچ کے شیر بنیں اور اس کے بعد ایک نیا جنم لے کر دنیا کو ایک نومولود بچے کی طرح ایک نئے اینگل سے دیکھیں

    شاک اور صدمے میں موجود فکری بیواؤں کو ٹاٹا کر کے ایک نئی دنیا میں آئیں



  • This post is deleted!